امرناتھ یاتریوں پر دہشت گردانہ حملے کی پارلیمنٹ میں سخت مذمت ، خراج عقیدت پیش کیا گیا

نئی دہلی: مانسون اجلاس کے پہلے دن آج پارلیمنٹ کے دونوں ایوانوں میں جموں کشمیر کے اننت ناگ میں گزشتہ دنوں امرناتھ یاتریوں پر ہوئے دہشت گردانہ حملے کی سخت الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے حملے میں مارے گئے لوگوں کو خراج عقیدت پیش کیا گیا۔ اس کے ساتھ ہی کل سرینگر جموں شاہراہ پر ہوئے بس حادثے میں بھی امرناتھ یاتریوں کے مارے جانے پر افسوس کا اظہار کیا گیا۔
لوک سبھا اسپیکر سمترا مہاجن نے صبح ایوان کی کارروائی شروع ہونے کے بعد آنجہانی اراکین کو خراج عقیدت پیش کرنے کے بعد جموں و کشمیر میں دہشت گردانہ حملے میں امرناتھ یاتریوں کی موت پر گہرے رنج و غم کا اظہار کیا اور دہشت گردانہ حملے کو ایک بزدلانہ کاروائی قرار دیتے ہوئے مرنے والوں کے اہل خانہ کے ساتھ ایوان کی جانب سے ہمدردی کا اظہار کیا اور مرنے والے لوگوں کی روح کو سکون کے لئے ایوان میں دو منٹ کی خاموشی اختیار کی گئی۔
راجیہ سبھا میں چیئرمین حامد انصاری نے اننت ناگ میں امرناتھ یاتریوں پر ہوئے دہشت گردانہ حملے کو ایک وحشیانہ اور بزدلانہ کارروائی قرار دیتے ہوئے اس کی سخت مذمت کی اور کہا کہ ایوان دہشت گردی کے خاتمے کے لئے متحد ہ کوششوں کے عزم کا اظہار کرتا ہے۔ مسٹر انصاری نے ملک کے کئی حصوں میں آئے تباہ کن سیلاب میں ہوئی اموات اور جان و مال کے نقصان پر بھی گہرے رنج و غم کا اظہار کرتے ہوئے مرنے والوں کو خراج عقیدت پیش کیا اور زخمیوں کی جلد صحت یاب ہونے کی دعا کی۔

Title: parliament condemns terror attack on amarnath yatris | In Category: ہندوستان  ( india )