امرناتھ یاتریوں سے بھری بس کے ڈرائیور محمد سلیم شیخ نے مسلمانوں کا سر بلند کر دیا :رضا اکیڈمی

ممبئی:گزشتہ دنوں امرناتھ یاترا کے دوران ہوئے دہشت گردانہ حملے میں یاتریوں سے بھری بس کے ڈرائیور محمد سلیم غفور شیخ کی حاضر دماغی کے سبب ایک جانب جہاں بس میں سوار متعدد یاتریوں کی جان بچ گئی وہیں دوسری جانب سلیم کی اس حاضر دماغی اور جرا ئتمندانہ فیصلے سے قومی سطح پر مسلمانوں کا سر بلند ہوا ہے اور یہ ان فرقہ پرستوں پر بھی زوردار طمانچہ ہے جو دہشت گردی کی آڑ میں مسلمانوں کو بدنام کر رہے ہیں ان خیالات کا اظہار ممبئی میں منعقدہ ایک تقریب کے دوران علمائے کرام اور دانشوروں نے کیا جس میں بی جے پی ممبئی کے صدر آش شیلار و نائب صدر حیدر اعظم و دیگر نے بھی شرکت کی۔
رضا اکیڈمی ممبئی کی جانب سے سلیم شیخ کے اعزاز میں منعقدہ تہنیتی نشست کے دوران ڈرائیور محمد سلیم غفور شیخ نے اخبار نویسوں سے بھی گفتگو کی اور کہا کہ امرناتھ یاترا میں بس پر ہوئے دہشت گردانہ حملے کے بعد تقریبا ایک کلو میٹر تک کا اس نے بس چلایا اس دوران بس میں سوار افراد کی آہ و بقا و چیخ و پکار آ رہی تھی لیکن اس نے حوصلہ نہیں ہارا اور اللہ کی مدد اسے حاصل ہوئی۔ سلیم غفور شیخ نے کہا کہ اللہ کا نام لے کر اس نے مصیبت کی اس گھڑی میں اپنا فرض نبھاتے ہوئے تیز رفتاری سے گاڑی کو سری نگر جمہوں نیشنل ہائی وے کی جانب موڑ دیا۔ بی جے پی ممبئی صدر و رکن اسمبلی آشش شیلار نے اس موقع پر سلیم شیخ کو مبارکباد پیش کی اور کہا کہ انہوں نے انسانیت کا لحاظ رکھتے ہوئے اپنے فرض کو بخوبی نبھایا تھا جس کی مثال دنیا بھر میں دی جا سکتی ہے۔
انہوں نے کہا کہ سلیم شیخ کے اس قدم سے ایک طرف جہاں فرقہ وارانہ ہم آہنگی میں اضافہ ہو گا وہیں ملک میں آپسی بھائی چارہ کا بھی فروغ ہو گا۔ مولانا محمد یسین اختر مصباحی (امام سنی کربلا مسجد بھارتیہ کملا نگر انٹاپ ہل )نے کہا کہ ہم سلیم غفور شیخ کے عمل سے بہت خوش ہیں انہوں نے بڑی جرا ئت مندی کے ساتھ بس ڈرائیو کرتے ہوئے اسے محفوظ مقام تک لے جانے کی کوشش کی یہ ان کی انسانی ہمدردی کا بین ثبوت ہے۔

Title: we are proud of driver of amarnath yatris bus says raza academy | In Category: ہندوستان  ( india )