دہلی یونیورسٹی طلبا یونین الیکشن 2-2سیٹوں سے ڈرا

نئی دہلی: جے این یو اسٹوڈنٹس یونین الیکشن میں چاروں سیٹیں بایاں محاذ سے ہارنے کے بعد بی جے پی کے طلبا بازو اکھل بھارتیہ ودیارتھی پریشد کو دہلی یونیورسٹی طلبا یونین کے انتخابات میں بھی اس وقت زبردست جھٹکا لگا جب کانگریس کے طلبا بازو نیشنل اسٹوڈنٹس یونین آف انڈیا(این ایس یو آئی) نے صدر اور نائب صدر کی سیٹیں اے بی وی پی سے چھین لیں۔
جبکہ اے بی وی پی نے جنرل سکریٹری کے عہدے پر اپنا قبضہ برقرار رکھتے ہوئے جوائنٹ سکریٹری کی سیٹ این ایس یو آئی سے چھین لی۔2-2سے ہونے والے اس ڈرا مقابلہ میںاین ایس یو آئی کے صدارتی امیدوار راکی توسید نے اپنے قریبی حریف اے بی وی پی کے رجت چودھری کو اور نائب صدر کے امیدوار کنال سہراوت نے پارتھو رانا کو ہرایا جبکہ اے بی وی پی کے جنرل سکریٹری امیدوار مہا میدھا نے میناکشی مینا کو اور اوما شنکر نے اویناش یادو کو ہرایا۔
واضح رہے کہ ابتدائی راو¿نڈز میں اے بی وی پی نے چاروں سیٹوں پر سبقت حاصل کر رکھی تھی اور اس کے کیمپ میں ڈھول تاشے لانا شروع کر دیے گئے تھے ۔لیکن جوں جوں ووٹوں کی گنتی آگے بڑھتی رہی پانسہ این ایس یو آئی کے حق میں پلٹتا گیا۔جو تین سیٹوں پر اس کی جیت کے ساتھ سامنے آیا۔2012کے بعد یہ پہلا موقع ہے کہ این ایس یو آئی کو ایسی شاندار کامیابی ملی ہے۔

Title: dusu election result nsui wins president vice president setback for abvp | In Category: ہندوستان  ( india )
Tags: , ,