رافیل جنگی طیاروں کے سودے میں گھپلے کی بو آرہی ہے: کانگریس

نئی دہلی: کانگریس نے مودی حکومت پر الزام لگایا ہے کہ اس نے رافیل جنگی طیارے خریدنے کے سودے میں تمام اصولوں کو بالائے طاق رکھ دیا ۔اورکہا کہ وزیر اعظم نریندرمودی نے اپنے صنعتکار دوست کے لیے ملک کی سلامتی سے تو سمجھوتہ کیا ہے ساتھ ہی اس سے حکومتی خزانے کوبھی نقصان پہنچے گا۔
کانگریس نے مزید کہا کہ اس سودے میں گھپلے کی بو آرہی ہے۔کانگریس کے میڈیا انچارج رن دیپ سنگھ سرجے والا نے ایک خصوصی پریس کانفرنس میںکہا کہ مودی نے دو سال پہلے دورہ فرانس کے دوران دفاعی سازو سامان کی خریداری کے اصول و ضوابط کی کوئی پروز کیے بغیر 36رافیل جنگی طیارے خریدنے کی منظوری دےدی تھی۔
انہوں نے الزام لگایا کہ اس سودے میں کوئی شفافیت نہیں برتی گئی۔اور نہ ہی اس موقع پر وزیر دفاع موجود تھے۔ یہاں تک کہ اس سودے کے لیے مرکزی کابینہ اور دفاعی امور کی کمیٹی نیز دیگر اداروں سے منظوری تک نہیں لی گئی۔سرجے والا نے کہا کہ وہ یہ پوچھنا چاہتے ہیں کہ آخر شفافیت کو طاق پر رکھ کر کس بنیاد پر اس سودے کے حوالے سے یکطرفہ فیصلہ کیا گیا۔

Title: congress raises question over buying of rafale aircraft | In Category: ہندوستان  ( india )